178620

نواز اور مریم کے خلاف توہین عدالت کی درخواست سماعت کیلئے منظور

اسلام آباد:(عامر لیاقت نیوز ) نااہل سابق وزیر اعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز پانامہ کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے کو مکمل طور پر رد کرتے ہوئے گزشتہ چند ماہ سے مسلسل عدلیہ کے خلاف زہر افشانی کررہے ہیں اور عوامی اجتماعات ، الیکٹرانک اور سوشل میڈیا پر عدالتی فیصلے کی دھجیاں اڑاتے دکھائی دیتے ہیں اور عوام حیران ہیں کہ ان کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کیوں عمل میں نہیں آتی اور پیمرا اس حوالے سے خاموش تماشائی کیوں بنا ہوا ہے تاہم اب اس حوالے سے اہل وطن کے تحفظات دور ہو جائیں گے کیو نکہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے سابق وزیراعظم نواز شریف اور مریم نواز کے خلاف دائر توہین عدالت کی درخواست کو سماعت کے لیے منظور کرلیا ہے۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق نے مدعی عدنان اقبال کی درخواست کی سماعت کی جس میں نواز شریف، مریم نواز، الیکٹرانک میڈیا کے نگراں ادارے پیمرا اور دیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ پاناما فیصلے میں نااہل قرار پانے اور وزارت عظمیٰ سے برطرفی کے بعد نواز شریف اور مریم نواز عدالتوں کے خلاف نفرت پھیلا رہے ہیں۔ دونوں سیاسی رہنماؤں نے کوٹ مومن جلسے میں اور پنجاب ہاوٴس میں عدلیہ مخالف تقاریر کیں۔درخواست گزار نے استدعا کی کہ نواز شریف اور مریم نواز کے خطابات اور بیانات توہین عدالت کے زمرے میں آتے ہیں، عدالت سے گزارش ہے کہ دونوں فریقوں کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں